آسٹریا الیکشن :بازو کے امیدوارنوربرٹ کو شکست، الیگزینڈر فان ڈیئر بیلن جیت گئے

ویانا آسٹریا کے صدارتی انتخابات میں فریڈم پارٹی نے اپنے امیدوار نوربرٹ  ہوفر کی شکست تسلیم کر لی ، ہوفر گرین پارٹی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار  الیزینڈر فان ڈیئر بیلن سے کافی پیچھے ہیں۔خبرملکی خبررساں ادارے کے مطابق  صدارتی انتخابات کے ایگزٹ جائزوں میں بتایاگیا کہ کے مطابق گرین پارٹی کے  حمایت یافتہ آزاد امیدوار الیگزینڈر فان ڈیئر بیلن اپنے حریف سیاستدان  نوربرٹ ہوفر پر واضح برتری حاصل کیے ہوئے ہیں۔انہی جائزوں کے بعد فریڈم  پارٹی نے اس الیکشن میں اپنی شکست بھی تسلیم کر لی ہے۔ فریڈم پارٹی کے  اعلیٰ عہدیدار ہیربرٹ کِکّل نے گفتگو میں کہاکہ میں الیگزینڈر فان ڈیئر  بیلن کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔آسٹریا کے اس الیکشن میں اینٹی اسٹیبلشمنٹ  ہوفر کی شکست کے باعث یورپی یونین کے رہنماؤں کو اطمینان ہو جائے گا کیونکہ  بریگزٹ اور امریکا میں ری پبلکن سیاستدان ڈونلڈ ٹرمپ کی کامیابی کے بعد  ایسے اندازے لگائے جا رہے تھے کہ یورپ میں بھی عوامیت پسند سیاستدان  کامیابیاں سمیٹ سکتے ہیں۔ہوفر نے کہا تھا کہ اگر وہ صدر منتخب کر لیے گئے  تو وہ روس کے ساتھ تعلقات میں بہتری لاتے ہوئے یورپی یونین کی طاقت کو  چیلنج کرنے کی کوشش کریں گے۔کئی مبصرین نے خدشات ظاہر کیے تھے کہ اگر  آسٹریا میں ہوفر کامیاب ہوئے تو اس کا اثر دیگر یورپی ممالک کی سیاست پر  بھی پڑے گا اور جرمنی، فرانس اور ہالینڈ میں ہونے والے انتخابات میں بھی  عوام دائیں بازو کے عوامیت پسند سیاستدانوں کی طرف مائل ہو جائیں گے

Comments

Popular posts from this blog

میں اسلم کے عہد میں جی رہا ہوں تحریر : مجیدبریگیڈ سلمان حمل