آواران ریاستی مخبر کو ہلاک کرنے کی ذمہ داری قبول کرتے ہیں،بی ایل ایف

کوئٹہ  بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے نامعلوم مقام سے  سیٹلائٹ فون کے ذریعے آواران کے علاقے ماشی میں فائرنگ کرکے ریاستی اہم  مخبر و آلہ کار مولابخش عرف مولو کو ہلاک کرنے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے  کہا کہ وہ براہ راست پاکستانی فوج کے ساتھ فوجی آپریشنوں، اغوا اور بلوچ  فرندوں کی قتل میں پاکستانی فوج کے ساتھ تھا۔ آواران تیرتیج میں ذکری عبادت  خانہ پر حملہ اور سات بلوچوں کی شہادت میں بھی مولابخش مولو فوج و اُس کے  سازش میں ملوث تھا۔ اس حملے میں مولابخش مولو کے ساتھ بیٹھے بزرگ شخص محمد  بخش ایک گولی لگنے سے شہید ہوئے ہیں۔ جس کا ہمیں بے حد افسوس ہے اور ہماری  ہمدردیاں اُس کے خاندان کے ساتھ ہیں۔ گہرام بلوچ نے مزید کہا کہ عوام  ریاستی مخبروں اور فورسز کے قریب رہنے سے گریز کریں اس لیے کہ ریاستی فوج  ،اسکے معاون کار سرمچاروں کے نشانے پر ہیں

Comments

Popular posts from this blog

میں اسلم کے عہد میں جی رہا ہوں تحریر : مجیدبریگیڈ سلمان حمل