بی آر اے نے فورسز اور تنصیبات پر حملے کی ذمہ داری قبول کرلی

کوہٹہ  بلوچ ریپبلکن آرمی نے مختلف حملوں کی ذمہ داری قبول کرلی۔بی آر اے کے ترجمان سرباز بلوچ نامعلوم مقام سے اپنے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ کل رات بلوچ ریپبلکن آرمی کے سرمچاروں نے نصیرآباد کے علاقے بانڑی میں قائم ایف سی اور ڈیتھ سکواڈ کے کارندوں کے کیمپ پر راکٹوں اور خودکار ہتھیاروں سے حملہ کیا ۔

 حملے میں ایف سی کے چار جبکہ ڈیتھ سکواڈ کے دو کارندے مارے گئےاور متعدد اہلکار زخمی ہوئے ہیں
بلوچ ریپلکن آرمی ان زر خرید لوگوں کو تنبیح کرتے ہیں کہ جو کچھ پیسوں کی خاطر اپنے ہی قوم کے خلاف ریاست کے آلہ کار بنے ہوئے ہیں ، اپنے ان حرکتوں سے باز رہیں ورنہ انہیں بھی اسی طرح نشانہ بنایا جائے گا۔

ایک اور کاروائی میں بلوچ ریپبلکن آرمی کے سرمچاروں نے بولان کے علاقے گوکوڑت میں گڈو سے کوئٹہ جانے والی ہائی ٹرانسمیشن 220 کے وی بجلی کے دو کمبھوں کو دھماکے خیز مواد نسب کرکے تباہ کردیئے ۔

بی آر اے کے ترجمان نے کہا کہ گزشتہ روز کولواہ کے علاقے ڈنڈار اور ملک بند کے درمیان ھاشال کے مقام پر پاکستانی فورسز کی ایک کانوائے پر ہمارے سرمچاروں نے راکٹوں اور خودکار ہتھیاروں سے حملہ کیا جس کے نتیجے میں فورسز کے متعدد اہلکا ر ہلاک و ز خمی ہوئے۔

Comments

Popular posts from this blog

میں اسلم کے عہد میں جی رہا ہوں تحریر : مجیدبریگیڈ سلمان حمل