آواران آپریشن جاری،مشکے ایک فرزند حراست بعد لاپتہ

شکے/  آواران مشکے پاکستانی فوج نے ایک بلوچ فزرند کو گھر سے حراست  بعد لاپتہ کر دیا،جبکہ گزشتہ روز سے آواران کے مختلف علاقوں میں فوجی  آپریشن جاری ہے۔یہاں آمدہ اطلاعات کے مطابق آواران کے علاقے  پیراندر،زرانکولی،سہریں دمب،پونڈوک،گرائی ،چیل،گزی چیل، سوروک گڈوپ،زومدان  گزی، کریم بخش بازار، اعظم گوٹھ، گزشتہ روز سے تاحال فوجی محاصرے میں ہیں  اور داخلی و خارجے راستے مکمل سیل کر دئیے گئے ہیں،عوام کو ضرورت زندگی  اشیاء تک رسائی کے لیے مکمل بندش لگانے کے ساتھ شدید جارحیت کی اطلاعات  ہیں۔مشکے سے نامہ نگار کے مطابق بدھ کی رات مشکے کے علاقے نوکجو میں  پاکستانی فورسز نے شہید شاہ جی کے گھر پر دھاوا بول کر گھروں میں لوٹ مار  کے ساتھ خواتین کو تشدد کا نشانہ بنایا اور شہید کے بھائی شاہ نواز کو  حراست بعد ساتھ لے گئے واضح رہے کہ30 جون 2015 فورسز کے آپریشن میں شاہ  نواز کے بھائی شاہ جی شہید ہوئے تھے۔

Comments

Popular posts from this blog

میں اسلم کے عہد میں جی رہا ہوں تحریر : مجیدبریگیڈ سلمان حمل