شبیر بلوچ کے اہلیہ کی التجا

شبیر بلوچ کے اہلیہ کی التجا

آج انسانی حقوق کا عالمی دن ہے، میں نے سنا ہے کہ اس دن دنیا کے تمام انسانی حقوق کے ادارے اور ممالک دنیا کے تمام انسانوں کے حقوق کی حفاظت کے لئے حلف لیتے ہیں اور اپنے اس مشن کو تیزتر کرنے اور اپنے آئین و قانون پر پورا اترنے کی سوگند ا ±ٹھاتے ہیں۔

میری گزارش ہے کہ آج انسانی حقوق کے اس عالمی دن کی مناسبت سے انسان دوست حضرات و تنظیمیں میری آواز کے انصاف کے اداروں تک پہنچائیں، کیونکہ میری رسائی ان اداروں تک ممکن نہیں لیکن اس دنیا میں ایسے لوگ یقیناً ہونگے کہ انکے رسائی ان اداروں تک ممکن ہے۔ ایسا کرکے وہ ایک ماں سے انکے جگر کے ٹکڑے کو لوٹانے میں شاید کامیاب ہو جائےں۔ میں تمام قلمکاروں سے التجا کرتی ہوں کے وہ نوجوان شبیر بلوچ کی رہائی کے لئے اپنے قلم کی آواز کو میری کمزور آواز سے ملائیں۔

ہمارے دن رات اس بے سکونی کے عالم میں گزر رہے ہیں کہ ہمیں کچھ سجائی نہیں دیتا کہ کہاں جائیں، کس سے معلوم کریں کے شبیر بلوچ اس وقت کہاں ہیں اور کیسے ہیں؟ میں انسانی حقوق کے اداروں سے تمام انسان دوستوں سے آج کے دن کی مناسبت سے اپیل کرتی ہوں کے وہ میرے شبیر کی بازیابی کے لئے آواز ا ٹھائیں اس سے پہلے کہ بہت دیر ہوجائے۔

زرینہ بلوچ ،اہلیہ شبیر بلوچ

Comments

Popular posts from this blog

میں اسلم کے عہد میں جی رہا ہوں تحریر : مجیدبریگیڈ سلمان حمل